Home / شمارہ اگست 2018 / شمارہ جولائی 2018 / بچوں کو مفید شہری بنائیں

بچوں کو مفید شہری بنائیں

تحریر:طاہر محمود

خود بھی مفید شہری بنیں اور بچوں کو بھی مفید شہری بنائیں۔

مفید شہری وہ ہوتا ہے جس سے اس کے گلی محلے، شہر، ملک اور دوسروں لوگوں کو فائدہ پہنچتا ہے۔ اس ضمن میں کچھ گزارشات ہیں۔اپنے آس پاس کو صاف ستھرا رکھیں۔ بچوں کو بھی اس کی ترتیب دیجیے۔ گھر، گلی محلے اور پارک میں جہاں بھی ہوں تو کوڑا کرکٹ کوڑے دان میں ڈالیں اور ڈلوائیں۔۔ پکنک اور سیر و تفریح کے دوران بھی اس بات کا خاص خیال رکھیں۔

  • گاڑی چلاتے وقت ٹریفک قوانین کی پابندی کیجیے۔ گاڑی صحیح جگہ پارک کیجیے۔
  • دوسرے کی مدد کیجیے۔ ان کے مسائل حل کرنے میں اپنا کردار ادا کریں۔
  • اپنے گھر، محلے اور شہر کو سرسبز بنائیے۔ زیادہ سے زیادہ پودے لگائیے۔
  • اپنے پڑوسیوں کا خاص خیال کیجیے۔
  • ہر راہ چلتے کو سلام میں پہل کیجیے۔
  • پانی،بجلی اور گیس کو ضائع ہونے سے بچائیے۔
  • تمام ملکی قوانین کی پابندی کیجیے۔
  • کھلے دل و دماغ کے حامل بنیں۔ مذہب، قوم یا سیاست کی بنیاد پر کسی سے بھی نفرت اور برس سلوک نہ کیجیے۔
  • دوسروں کو بھی مفید شہری بننے کی ترغیب دیجیے۔

جب آپ باقاعدہ طور پر مفید شہری ہونے کا ثبوت دیتے رہیں گے تو آپ کی دیکھا دیکھی آپ کے بچوں میں بھی قانون کا احترام اور احساسِ ذمہ داری پیدا ہو جائے گا اور وہ بھی مفید شہری ثابت ہوں گے۔ کیونکہ بچے وہی کچھ بنتے ہیں جو وہ اپنے والدین کو بار بار کرتے ہوئے دیکھتے ہیں۔

***********

About طاہر محمود

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *