Home / خواتین اسپیشل / گھر پر توجہ دیجیے

گھر پر توجہ دیجیے

توجہ ہو یا بےتوجہی دونوں جھلک جاتی ہے۔ پھر چاہئے وہ گھر ہو یا بچے ۔ یاد رکھیئے جو چیز بھی آپ کی روح اور دل کے قریب ہو تو اس میں توجہ دینے کے سبب ہر چیز میں خوبصورتی اور ہنر جھلکتا ہے۔ جس سے آپ کو محبت ہو اس کو بہترین اور موٹیویشنل مشورے دئے جاتے ہیں اپنی ساری صلاحیت لگادی جاتی ہے۔ گھر سے لگاؤ ہو تو اس کی خوبصورتی کے لئے پرانی بےکار چیزوں کو بھی کارآمد بنالیا جاتا ہے یہاں تک کہ بیکار رکھی ردی سے بھی پیپر سے بھی گلدان اور خوبصورت دیدہ ذیب ڈیکوریشن پیسیز بنالیئے جاتے ہیں۔ حتیٰ کہ اگر آپ کو گارڈیننگ کا شوق ہے تو آپ کے معمولی گملے بھی پینٹ ہوئے ہونگے۔ گملے رکھنے اور پودے رکھنے کا انداذ بھی آرٹسٹک ہوجائے گا۔ کھانا پکانے کا شوقین شخص جو مارے باندھے کھانا نہی پکاتا بلکہ بہت ذوق و شوق سے کھانا بناتا ہے تو اس کی نا صرف انگلیوں میں ذائقہ ہوگا بلکہ اس کی پریزنٹیشن بھی کمال کی ہوگی۔ انگلیوں میں ذائقہ تب آتا ہے جب آپ کی انگلیاں آپ کی آنکھ بن جائے ۔

لیکن یہ سب صلاحتیں اس وقت باہر آئیں گی جب آپ کا ماحول پرسکون ہوگا اور آپ خود کو اعصابی طور پر پرسکون محسوس کریں گے۔ اور اعصاب کا سکون گہری سانس سے ہے۔ اور سانس کا تعلق تازہ ہوا اور آکسیجن سے ہے۔ جوکہ میرے ملک میرے معاشرے میں زبردستی ختم کی جارہی ہے تاکہ پورا ملک معاشرہ اور اسکے باسی آپس میں ہی عدم برداشت کے سبب لڑلڑکر مرجائیں۔
ہم ہر وقت دوسروں پر انحصار کیوں کرتے ہیں؟ کیا ہمیں خود سے یا اپنوں سے پیار نہیں۔ کیا ہم صرف فیس بک پر ہی سگھڑ سلیقہ مند اور خوش اخلاق ہیں۔ جبکہ گھر پر بدتمیز، بدزبان ،بداخلاق، پھاڑ کھانے والے جنگلی بھیڑئے؟ — خدارا بدل لیں اپنے حالات۔ باہر نکل کر درخت لگانا ایک الگ اور عمدہ کام ہے ضرور لگائیں لیکن اپنے گھر میں بھی آکسیجن پیدا کریں۔ اور ابتداء کچن گارڈیننگ سے کریں۔ اس سے نا صرف گھر میں خوبصورتی آئے گی بلکہ تروتازگی کا احساس بھی رہے گا۔ اور تو اور آپ کا روز کا خرچہ بھی بچے گا۔
کچن گارڈیننگ کرتے وقت یہ دھیان رہے کہ اگر آپ سبزی اگارہے ہیں تو اس کو کم اذ کم چھ گھنٹہ تیز دھوپ درکار ہے۔ اور اس بات کا بھی دھیان رہے کہ وہی سبزی اگائیے جس کی آپ کو روزانہ ضرورت ہوتی ہے اور تازی ملنا مشکل ہوتی ہے تاکہ میاں یا بیٹے کو کال کرکے تنگ نہ کرنا پڑے۔ ساتھ ہی دہی بھی گھر پر جمانا شروع کردیں تو سچ مچ میاں اور بیٹے کی جان ان روز کے خرچوں سے چھوٹ جائے۔ میری کوکنگ میں اسپینش مکیسیکن تھائی اور اٹالین عموماً شامل ہوتا ہے۔ اس لئے زیادہ تر اسی حساب سے سبزیاں اور ہربز اگارکھی ہیں۔ پاکستانی / انڈین کھانے کی مین انگریڈینٹ پیاز ہم مہینے کے سودے میں لاتے ہیں اور اس قدر زمین نہ ہونے کے

سبب پیاز اگانا ممکن نہیں ورنہ پیاز ، اور آلو، شکر قندی بھی گھر پر اگ سکتے ہیں۔

میرے کچن گارڈن کی سبزیاں اور ہربز

لیموں،لہسن،ادرک ،ہری مرچیں،شملہ مرچ،ہرادھنیہ،پودینہ بیزل (تلسی)،سیلری،سلاد پتہ،کڑی پتہ،میتھی،لیمن گراس ( اسکی بہترین چائے بنتی ہے)،چائینا گراس ،ایگ پلانٹ ،بھنڈی ،پالک،زوکینی (بےبی لوکی)، لوکی،توری ، ٹماٹر ،سجنے کی پھلی،کلوندا (اچار کے لئے) ، لیک (ہری پیاز)اوریگانو کے پتے اور مارجوریم (یعنی اسکے پرپل سے پھول)، تھایم (ہرب ہے اور پودینے کی فیملی سے ہے)، روز میری (یہ بہت محسورکن ہرب ہے اور سارا سال رہتی ہے)

آپ اپنی ضرورت اور موسم کے حساب سے سبزی اور ہربز لگالیجئے۔ گھر اور راہ داری کو خوبصورت بنانے کے لئے کروٹن منی پلانٹ لگائیں۔ خرچہ بھی کم اور اعصابی و روحانی سکون بھی ۔ نیٹ بھرا ہوا ہے کہ پودے کیسے لگائیں کب لگائیں ۔ ویسے یہ سب مالی اور بیج والا بتادےگا۔ بس بسمﷲ کریں۔

سعدیہ کامران

About سعدیہ کامران

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *